اسلام ٹائمز 7 Apr 2014 گھنٹہ 10:21 https://www.islamtimes.org/ur/news/369953/حکومت-نے-بھی-طالبان-سے-قیدیوں-کی-رہائی-فہرست-تیار-کر-لی -------------------------------------------------- ٹائٹل : حکومت نے بھی طالبان سے قیدیوں کی رہائی کی فہرست تیار کر لی -------------------------------------------------- اسلام ٹائمز: ذرائع کا کہنا ہے کہ طالبان نے اب تک حکومت کو دو فہرستوں میں خواتین اور بچوں سمیت چھ سو سے زائد قیدیوں کی فہرست بھیجی ہے۔ حکومتی ترجیحات میں جنگ بندی پر عملدرآمد جبکہ طالبان کی طرف سے قیدیوں کی رہائی اور پیس زون کے قیام پر زور دیا جا رہا ہے۔ متن : اسلام ٹائمز۔ طالبان کی طرف سے قیدیوں کی رہائی کے مطالبے کے بعد حکومت کی مذاکراتی کمیٹی نے بھی طالبان شوریٰ سے آئندہ ہونیوالی ملاقات میں قیدیوں کے تبادلے کے حوالے سے ہوم ورک شروع کر دیا ہے۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اس سلسلے میں حکومتی کمیٹی کے ایک رکن اور وزارت داخلہ کے سینئر افسر طالبان کی قید میں موجود افراد کی فہرست مرتب کر رہے ہیں کیونکہ حکومت چاہتی ہے کہ رہائی کا عمل دو طرفہ ہو۔ ذرائع کے مطابق حکومتی کمیٹی کی طرف سے اب تک طالبان کمیٹی یا شوریٰ سے ہونیوالی ملاقاتوں میں قیدیوں کی باضابطہ فہرست پیش نہیں کی گئی تاہم ان ملاقاتوں میں پروفیسر اجمل خان، سابق گورنر پنجاب سلمان تاثیر کے صاحبزادے شہباز تاثیر اور سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے علی حیدر گیلانی کی بازیابی کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ ذرائع نےبتایا ہے کہ حکومتی فہرست میں علماء اور انجینئرز سمیت بعض غیر ملکی افراد بھی شامل ہیں جو طالبان کیقید میں ہیں۔ طالبان شوریٰ نے 8 فروری کو طالبان کمیٹی کے ارکان پروفیسر ابراہیم اور مولانا یوسف شاہ سے شمالی وزیرستان میں ہونیوالی ملاقات میں تین سو قیدیوں کی فہرست پیش کی، اسی طرح 26مارچ کو ہونیوالی دوسری ملاقات میں بھی تین سو سے زائد قیدیوں کی فہرستدی گئی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ طالبان نے اب تک حکومت کو دو فہرستوں میں خواتین اور بچوں سمیت چھ سو سے زائد قیدیوں کی فہرست بھیجی ہے۔ حکومت طالبان مذاکرات میں اس وقت حکومتی ترجیحات میں جنگ بندی پر عملدرآمد جبکہ طالبان کی طرف سے قیدیوں کی رہائی اور پیس زون کے قیام پر زور دیا جا رہا ہے۔ توقع کی جا رہی ہے کہ دونوں کمیٹیوں کے درمیان ہونیوالی آئندہ ملاقات میں قیدیوں کی رہائی کا عمل شروع ہو جائے گا۔ حکومتی کمیٹی اور طالبان کے درمیان براہ راست مذاکرات کیلیے ایک بار پھر رابطوں کا آغاز ہو گیا ہے۔ طالبان کمیٹی نے امید ظاہر کی ہے کہ اگلے دو روز میں مذاکرات کی جگہ اور وقت کا تعین ہو جائے گا۔ حکومتی کمیٹی کے رکن رستم شاہ مہمند نے کہا ہے کہ اگلے چند روز میں طالبان سے براہ راست مذاکرات ہوں گے جس میں اپنے مطالبات پیش کریں گے، دونوں کمیٹیوں کی گذشہ روز ہونے والی ملاقات بہت مثبت رہی، مذاکرات صحیح سمت میں آگے بڑھ رہے ہیں۔