0
Tuesday 19 Sep 2017 19:04

خیبر پختونخوا کے مزید 1395 سکولوں میں آئی ٹی لیبز کی منظوری

خیبر پختونخوا کے مزید 1395 سکولوں میں آئی ٹی لیبز کی منظوری
اسلام ٹائمز۔ خیبر پختونخوا کے وزیر ابتدائی و ثانوی تعلیم محمد عاطف خان نے مزید 1395 سرکاری سکولوں میں آئی ٹی لیب کے قیام کی منظوری دیتے ہوئے کہا ہے کہ گذشتہ چار سالوں کے دوران سرکاری سکولوں میں اب تک 1340 آئی ٹی لیب قائم کئے جا چکے ہیں اور پانچ سالہ مدت کی تکمیل تک آئی ٹی لیبز کی یہ تعداد 2735 ہو جائے گی اور کوئی بھی سکول آئی ٹی لیب کے بغیر نہیں رہے گا۔ واضح رہے کہ موجودہ حکومت کے برسر اقتدار آنے سے قبل سرکاری سکولوں میں صرف 170 آئی ٹی لیب تھیں۔ وزیر تعلیم محمد عاطف خان نے مزید آئی ٹی لیبز کی یہ منظور ی گذشتہ روز ایک اعلیٰ سطح کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے دی، جس میں سیکرٹری تعلیم ڈاکٹر شہزاد بنگش، سپیشل سیکرٹری قیصر عالم، ایڈیشنل سیکرٹری ارشد خان، ایم ڈی آئی ٹی بورڈ شہباز خان اور ڈائریکٹر تعلیم رفیق خٹک نے بھی شرکت کی۔
 
اجلاس میں آئی ٹی لیب کے قیام اور پہلے سے قائم آئی ٹی لیب کو سیکنڈ شفٹ میں کمیونٹی کے لئے کھولنے پر تفصیلی غور و خوض ہوا اور اس سلسلے میں کئی اہم فیصلے کئے گئے۔ وزیر تعلیم نے کہا کہ پہلی شفٹ میں آئی ٹی لیب طلبہ کے زیراستعمال رہیں گی اور انہیں اگلی شفٹ میں کمیونٹی کے لئے کھولا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ لیب ملک کے نامی گرامی آئی ٹی اداروں کے حوالے کی جائیں گی جو عوام کو سیکنڈ شفٹ میں مارکیٹ سے کم رعایتی فیسوں پر بہترین آئی ٹی پروگرام پیش کریں گی۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ دور آئی ٹی کا ہے اور اس کے بغیر شعبہ تعلیم ادھورا ہے اس لئے ہماری کوشش ہے کہ تمام سرکاری سکولوں میں آئی ٹی کو عام کریں۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ تعلیم پہلے ہی سرکاری سکولوں میں ارلی ایج پروگرامنگ شروع کر چکا ہے اور مزید کئی پروگرام زیرغور ہیں۔ 1395 آئی ٹی لیب کے قیام پر تقریباً 4 ارب روپے خرچ ہوں گے اور انہیں ہر حال میں چھ ماہ کے عرصہ میں مکمل کیا جائے گا۔
خبر کا کوڈ : 670365
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش