0
Wednesday 2 Jan 2019 10:27

سندھ پولیس، اہلکاروں کی 10 ہزار سے زائد آسامیاں خالی ہونیکا انکشاف

سندھ پولیس، اہلکاروں کی 10 ہزار سے زائد آسامیاں خالی ہونیکا انکشاف
اسلام ٹائمز۔ شہر قائد سمیت اندرون سندھ میں پولیس اہلکاروں کی 10 ہزار سے زائد آسامیاں خالی ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق متعلقہ حکام کی نااہلی یا کوئی اور معاملہ، صوبے کے کئی اضلاع میں منظور شدہ آسامیوں پر بھی مکمل بھرتیاں نہیں ہو سکیں، صوبے میں پولیس اہلکاروں کی خالی آسامیوں کی تفصیل سامنے آگئی، سب سے زیادہ حیدرآباد رینج میں 3300 آسامیاں خالی ہیں، کراچی میں پولیس کانسٹیبلز کی 2500 سے زائد منظور شدہ آسامیوں پر بھرتیاں نہیں کی گئیں، آئی جی سندھ پولیس کی جانب سے مرتب کردہ رپورٹ کے مطابق کراچی کے ساؤتھ زون میں پولیس کانسٹیبلز کی 1768 آسامیاں خالی ہیں۔

لیاری اور صدر ٹاؤنز پر مشتمل سٹی ڈسڑکٹ میں پولیس کانسٹیبلز کی 2561 منظور شدہ آسامیاں، جبکہ 1091 خالی ہیں، کراچی پولیس کے ویسٹ زون میں ضلع غربی اور ضلع وسطی شامل، جہاں پولیس کانسٹیبلز کی 997 آسامیوں پر بھرتیاں نہیں کی گئیں، جبکہ ملیر، کورنگی اور شرقی اضلاع پر مشتمل ایسٹ زون میں بھی پولیس کانسٹیبلز کی سینکڑوں آسامیاں خالی ہیں، ملیر میں 672 اور کورنگی میں 625 پولیس کانسٹیبلز کی آسامیاں خالی ہیں، ایسٹ زون پولیس کے زونل آفس میں پولیس کانسٹیبلز کی 36 منظور شدہ آسامیاں، جبکہ 73 تعینات ہیں۔

نو اضلاع پر مشتمل حیدرآباد رینج میں پولیس کانسٹیبلز کی 3355 آسامیوں پر کئی سال سے بھرتیاں نہیں کی گئیں، میرپور خاص ڈویژن میں پولیس کانسٹیبلز کی منظور شدہ 4222 آسامیوں میں سے 3568 پر تعیناتی مکمل کی گئی ہے، لاڑکانہ پولیس رینج میں کانسٹیبلز کی 1656 آسامیاں خالی ہیں، بے نظیرآباد ڈویژن میں منظور شدہ آسامیوں میں سے 851 پر پولیس کانسٹیبلز نہیں، سکھر پولیس رینج میں 1033 پولیس کانسٹیبلز آسامیاں خالی ہیں۔ پولیس اہلکاروں کی آسامیاں خالی ہونے سے صوبے میں قیام امن میں جہاں مشکلات درپیش ہیں، وہیں شہریوں کے تحفظ کا بھی سوال اٹھتا ہے۔
خبر کا کوڈ : 769700
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش