0
Monday 25 Feb 2019 18:48

امت مسلمہ عروج چاہتی ہے تو قرآن کریم سے محبت کرے، علامہ امین شہیدی

امت مسلمہ عروج چاہتی ہے تو قرآن کریم سے محبت کرے، علامہ امین شہیدی
اسلام ٹائمز۔ منہاج القرآن مرکزی سیکرٹریٹ لاہور میں کالج آف شریعہ اینڈ اسلامک سائنسز بزم منہاج (منہاج یونیورسٹی لاہور) کے زیراہتمام قائد تحریک منہاج القرآن ڈاکٹر طاہرالقادری کی 68ویں سالگرہ کے حوالے سے کل پاکستان بین الاکلیاتی ہفتہ تقریبات کا آغاز کر دیا گیا، ہفتہ تقریبات 25 فروری سے 28 فروری تک جاری رہے گا، ہفتہ تقریبات کا مقصد طلباء و طالبات میں اہم تعلیمی نصابی سرگرمیوں کا فروغ ہے، افتتاحی تقریب کا آغاز مقابلہ حسن قرأت و عربی تقریر کے مقابلوں سے ہوا، تقریب کے مہمان خصوصی امت واحدہ کے سربراہ علامہ امین شہیدی، صاحبزادہ دیوان مسعود احمد چشتی سجادہ نشین پاکپتن شریف، ڈاکٹر خان محمد ملک، مفتی عبدالقیوم خان ہزاروی، شفاقت علی بغدادی، ڈاکٹر ممتاز الحسن باروی تھے۔ مقابلہ حسن قرأت میں جیوری کے فرائض قاری سید نوید قمر، قاری خضر ذیشان نعیمی، قاری سید خالد حمید کاظمی نے انجام دئیے جبکہ عربی تقریری مقابلوں میں جیوری کے فرائض پروفیسر محمد افضل کانجو، پروفیسر ڈاکٹر حافظ خورشید احمد قادری اور محمد اقبال چشتی نے انجام دئیے۔

جی سی یونیورسٹی لاہور  پنجاب گروپ آف کالجز، تحفیظ القرآن، حیاۃ القرآن، اظہار القرآن، جامعہ اسلامیہ فیصل آباد، جامعہ اسلامیہ گجرات، جامعہ غوثیہ بھیرہ شریف، ادارہ تعلیمات اسلامیہ، منہاج گرلز کالج، جامعہ رضویہ سمیت مختلف یونیورسٹیز اور کالجز کے طلبہ اور طالبات نے قرأت اور تقریری مقابلوں میں حصہ لیا، طلبہ نے خوبصورت آواز، ادب اور ترتیل کیساتھ قرآن حکیم کی تلاوت کرکے سماں باندھ دیا، مقابلہ حسن قرأت میں مدرسہ حیاۃ القرآن کے ذیشان حفیظ نے پہلی، کالج آف شریعہ لاہور کے عبدالصمد نے دوسری، مدرسہ اظہار القرآن کے مبشر احمد نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔ عربی تقریری مقابلوں میں جامع اسلامیہ منہاج القرآن شعبہ عربی منہاج یونیورسٹی کے محمد طاہر نے پہلی، جامعہ اسلامیہ گجرات کے محمد سلمان نے دوسری جبکہ محمد اعجاز نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔

تقریب میں علامہ محمد عباس وزیری حوزہ علمیہ قم ایران کے استاد، ڈاکٹر ممتاز احمد سدیدی ایچ او ڈی اسلامک سٹیڈیز شریعہ کالج، ڈاکٹر ممتاز الحسن باروی پرنسپل منہاج کالج آف شریعہ، میر آصف اکبر مرکزی ناظم علماء کونسل،مرکزی رہنما تحریک منہاج القرآن راجہ زاہد،سہیل احمد رضا، شہزاد رسول بھی موجود تھے۔ نگران بزمِم منہاج صابر حسین نقشبندی نے استقبالیہ گفتگو کی۔ علامہ امین شہیدی نے اپنی گفتگو میں کہا کہ اگر امت مسلمہ عروج چاہتی ہے تو اسے قرآن حکیم سے محبت کرنا ہوگی، قرآن سے محبت ہی نجات کا باعث ہے، ڈاکٹر طاہر القادری نے اللہ کریم کی تائید و نصرت سے 8جلدوں پر مشتمل قرآنی انسائیکلوپیڈیا تالیف کیا، اس قرآنی انسائیکلوپیڈیا نے ہر مکتب فکر اور ہر سطح کی علمی استعداد رکھنے والے افراد کیلئے قرآن کو پڑھنا اور سمجھنا آسان بنا دیا قرآنی انسائیکلوپیڈیا نے عربی زبان نہ سمجھنے والوں کو بھی اس کی مکمل تفہیم کے قابل بنا دیا۔

انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر طاہرالقادری انتہائی قابل احترام شخصیت ہیں وہ مختلف مسالک کے درمیان ہم آہنگی کے فروغ میں پل کا کردار ادا کر رہے ہیں۔ صاحبزادہ دیوان مسعود چشتی نے کہا کہ ڈاکٹر طاہر القادری کی تالیف قرآنی انسائیکلوپیڈیا بذات خود ایک استاد اور ٹیوٹر ہے جو مطالعہ کرنیوالے کو پڑھاتا اور سمجھاتا چلا جاتا ہے۔ قرآن حکیم تخلیق کائنات کے اسرار ظاہر کرنیوالا نسخہ ہے۔ تقریب کے اختتام پر صاحبزادہ دیوان مسعود چشتی نے ملکی سلامتی و خوشحالی کیلئے دعا کی۔
خبر کا کوڈ : 780029
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے