0
Wednesday 18 Sep 2019 23:18

قصور واقعے پر ہر ذمہ دار کا احتساب ہوگا، عمران خان

قصور واقعے پر ہر ذمہ دار کا احتساب ہوگا، عمران خان
اسلام ٹائمز۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ قصور واقعے پر ہر ایک کا احتساب ہوگا، عام آدمی کے لئے کام نہ کرنے والوں کے خلاف ایکشن لیا جائے گا۔ قصور کی تحصیل چونیاں میں تین بچوں کے قتل کے اندوہناک واقعے پر وزیراعظم عمران خان کہا ہے کہ ڈی پی او قصور کو ہٹایا جا چکا ہے، جبکہ ڈی ایس پی اور ایس ایچ او کو معطل کر دیا گیا ہے، قصور پولیس میں بڑی اوورہالنگ کی تجویز ہے۔ وزیراعظم کا کہنا ہے کہ قصور واقعے پر ہر ذمے دار کا احتساب ہوگا، ایس پی انویسٹی گیشن قصور کو چارج شیٹ دے کر مزید کارروائی جاری ہے، ایڈیشنل آئی جی کی زیر ِنگرانی تفتیش کے احکامات دے دیئے گئے ہیں۔ واضح رہے کہ پنجاب کے ضلع قصور کے قریب چونیاں شہر کے مختلف مقامات سے اغواء ہونے والے 3 بچوں کی لاشیں گذشتہ روز جھاڑیوں سے ملی تھیں۔

چونیاں میں ڈھائی ماہ کے دوران اغواء ہونے والے 4 بچوں میں سے ایک بچے کی لاش اور 2 کی باقیات ملی ہیں، جبکہ ایک بچہ لاپتہ ہے، تینوں بچوں کو زیادتی کے بعد قتل کرکے لاشیں زمین میں دبائی گئی تھیں۔ پولیس کے مطابق رانا ٹاؤن کا 12 سالہ عمران یکم جون کو لاپتہ ہوا، 8 سالہ علی حسنین اور 9 سالہ سلمان اگست کے مہینے میں غائب ہوئے، 8 سالہ فیضان 16 ستمبر کو لاپتہ ہوا۔ پولیس کے مطابق فیضان کی شناخت ہوگئی ہے جبکہ علی حسنین اور سلمان کی شناخت کے لئے ریت سے ملنے والی باقیات کا ڈی این اے کرایا جائے گا۔ آئی جی پنجاب عارف نواز نے ایک بیان میں کہنا تھا کہ بچوں کے قتل کے واقعات میں بظاہر مماثلت نظر آتی ہے۔ بچوں کے اغواء و قتل کے واقعات پر شہری مشتعل ہوگئے اور پولیس اسٹیشن پر حملہ کر دیا، جبکہ ٹائر جلا کر راستے بھی بند کر دیئے، مشتعل عوام نے احتجاج کے دوران پولیس کے خلاف نعرے بازی کی اور پولیس اسٹیشن پر پتھراؤ بھی کیا۔
خبر کا کوڈ : 816988
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے