0
Saturday 9 Nov 2019 16:33

نیشنل کانفرنس کشمیر کے کسی بھی دیرپا حل کی کوششوں کا خیرمقدم کریگی، جسٹس مسعودی

نیشنل کانفرنس کشمیر کے کسی بھی دیرپا حل کی کوششوں کا خیرمقدم کریگی، جسٹس مسعودی
اسلام ٹائمز۔ جموں و کشمیر نیشنل کانفرنس کے لیڈر جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے کہا کہ ان کی پارٹی مسئلہ کشمیر کے دیرپا حل کی خاطر بھارت اور پاکستان کی جانب سے کسی بھی سنجیدہ کوشش کا خیرمقدم کیا جائے گا۔ سرینگر میں میڈیا کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے این سی کے لیڈر اور موجودہ رکن پارلیمان جسٹس (ر) حسنین مسعودی کا کہنا تھا کہ بھارت و پاکستان کی جانب سے مسئلہ کشمیر کے دیرپا حل کی خاطر کسی بھی سنجیدہ اور ٹھوس کوشش کا انکی پارٹی خیرمقدم کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر موجودہ صورتحال کے تناظر میں عالمی توجہ کا مرکز بن چکا ہے لہذا اس کا تذکرہ اقوام متحدہ میں ضرور ہونا چاہیئے تھا۔ جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے کہا کہ اگر نریندر مودی نے مسئلہ کشمیر کا تذکرہ ضروری نہیں سمجھا تو یہ ان کا اپنا فیصلہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت و پاکستان کے رہنماؤں کو چاہیئے کہ وہ مسئلہ کشمیر کے پُرامن حل کی خاطر عوام دوست اقدامات اٹھائیں تاکہ خطے میں پائی جارہی بے چینی کو دور کیا جاسکے۔ این سی لیڈر جسٹس (ر) حسنین مسعودی کا کہنا تھا بھارتی حکومت نے 5 اگست کو جو کشمیر مخالف فیصلے لئے ہمارا مطالبہ ہے کہ انہیں فوری طور پر منسوخ کیا جائے۔ انہوں نے دفعہ 370 کی منسوخی کو غیر آئینی، غیر قانونی اور غیر جمہوری قرار دیا ہے۔ انہوں جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے کہا کہ مسئلہ کشمیر ایک دیرینہ حل طلب معاملہ ہے جس کو بات چیت کے ذریعے ہی حل کیا جاسکتا ہے۔
 
خبر کا کوڈ : 826452
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب