0
Wednesday 20 Nov 2019 12:06

پاراچنار میں اپنی نوعیت کا پہلا واقعہ، 5 سالہ بچی زیادتی کے بعد قتل

پاراچنار میں اپنی نوعیت کا پہلا واقعہ، 5 سالہ بچی زیادتی کے بعد قتل
اسلام ٹائمز۔ قباٸلی ضلع کرم کے سرحدی گاوں پیواڑ سے انتہاٸی افسوسناک خبر آئی ہے، جہاں انسانیت ہار گٸی۔ پانچ سالہ معصوم بچی گل سکینہ کو زیادتی کے بعد قتل کردیا گیا، جس کی نعش تالاب سے برآمد ہوئی۔ تفصیلات کے مطابق قباٸلی ضلع کرم پاراچنار کے پاک افغان بارڈر پر واقع سرحدی گاوں پیواڑ میں سرکاری سکول کی طالبہ پانچ سالہ گل سکینہ سکول سے لاپتہ ہونے کے بعد شام کو مردہ حالت میں ایک تالاب سے ملی۔ نانا کیمطابق ہسپتال میں چیک اپ کے بعد بچی کے ساتھ جنسی زیادتی کا انکشاف ہوا ہے۔ جسے بعد میں قتل کرکے نعش ایک تالاب میں پھینکی گٸی تھی۔ بچی کے غریب والدین نے حکومت سے تحقیقات کرانے اور قاتل کو سرعام پھانسی دینے کا مطالبہ کیا ہے۔ بچی کے نانا کا میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اعلیٰ عدلیہ اور حکومتی ادارے مکمل تحقیقات کراتے ہوئے اصل مجرم کو فی الفور گرفتار کرکے نشانِ عبرت بنائیں، اور معصوم بچی کو انصاف دینے کا پر زور مطالبہ کرتا ہوں۔ علاوہ ازیں علاقہ بھر میں اس واقعہ پر شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے، واضح رہے کہ یہ پاراچنار میں اپنی نوعیت کا پہلا اس قسم کا افسوسناک واقعہ ہے۔
خبر کا کوڈ : 828132
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے