0
Thursday 21 Nov 2019 23:17

65 سال سے زیادہ عمر کے غریب اور بیمار قیدیوں کو رہا کرنے کا فیصلہ

65 سال سے زیادہ عمر کے غریب اور بیمار قیدیوں کو رہا کرنے کا فیصلہ
اسلام ٹائمز۔ وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے 65 سال سے زیادہ عمر کے غریب اور بیمار قیدیوں کو رہا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اسد عمر نے اپنے ٹویٹر پیغام میں بتایا ہے کہ وزیراعظم نے فیصلہ کیا ہے کہ 65 سال سے زیادہ عمر کے غریب قیدی جو بیمار ہیں اور کسی گھناؤنے جرم کے مرتکب نہیں، ان کو رہا کرنے کی پالیسی بنائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک ایسے پاکستان کی طرف ایک اور قدم ہے، جس میں حکومت کی اولین ترجیح ملک کا کمزور طبقہ ہے نا کے طاقتور اور دولتمند۔ واضح رہے کہ دوبارہ کابینہ میں شامل ہونے والے پاکستان تحریک انصاف رہنما اسد عمر سے چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کے عہدہ واپس لے لیا گیا ہے۔

ذرائع اسمبلی سیکریٹریٹ کے مطابق اسد عمر کو قائمہ کمیٹی صدارت سے ہٹانے کا باضابطہ نوٹیفکیشن جلد جاری کیا جائے گا۔ اسد عمر کے وفاقی وزیر بننے کے بعد ان سے قائمہ کمیٹی کی صدارت واپس لی گئی۔ میڈیا ذرائع نے بتایا کہ قائمہ کمیٹی کے چیئرمین کا عہدہ اسد عمر کے وزرات کے حلف اٹھانے کے دن سے خالی تصور ہو گا۔ نئے چیئرمین کے انتخاب کے لئے قائمہ کمیٹی خزانہ کا اجلاس جلد طلب کیا جائے گا۔ یاد رہے کہ پیر کے روز اسد عمر کو مخدوم خسرو بختیار کی جگہ وزارت منصوبہ بندی وترقی کا وزیر بنایا گیا تھا اور اب انہوں نے 65 سال سے زیادہ عمر کے غریب اور بیمار قیدیوں کو رہا کرنے کا اعلان کیا ہے۔ دوسری جانب سابق صدر آصف زرداری نے بھی نواز شریف کے نقشِ قدم پر چلتے ہوئے بیماری کی بنیاد پر ضمانت لینے کیلئے درخواست دینے کا فیصلہ کیا ہے۔
خبر کا کوڈ : 828375
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے