0
Monday 2 Dec 2019 11:22

خیبر پختونخوا کابینہ توسیع میں تاخیر، مولانا کا دھرنا رکاوٹ بنا

خیبر پختونخوا کابینہ توسیع میں تاخیر، مولانا کا دھرنا رکاوٹ بنا
اسلام ٹائمز۔ سیاسی بحرانوں کے باعث خیبر پختونخوا کابینہ میں توسیع کا فیصلہ تاخیر کا شکار ہوگیا۔ وزیراعظم عمران خان کی منظوری کے باوجود کابینہ کی منظوری نہ دی جاسکی، کابینہ میں منظوری کے حوالے ارکان اسمبلی کی نظریں وزیراعلٰی پر جم گئیں، خیبر پختونخوا کابینہ 14 وزراء، 3 مشیر اور 2 معاون خصوصی پر مشتمل ہے، لیکن کابینہ میں مزید توسیع کا فیصلہ بار بار التواء کا شکار ہو رہا ہے۔ کابینہ میں توسیع کی منظوری وزیراعظم عمران خان دے چکے ہیں، جبکہ کابینہ میں ارکان کو شامل کرنے کا اختیار وزیراعلٰی کو دیا گیا ہے، لیکن مولانا فضل الرحمٰن کے دھرنے سمیت پے درپے سیاسی بحرانوں کے باعث کابینہ میں توسیع التواء کا شکار ہو رہی ہے۔ حکومتی ذرائع کے مطابق ارکان کی ممکنہ ناراضگی بھی رکاوٹ کا سبب بن رہی ہے، کابینہ سے محروم رہ جانیوالے ارکان کو ڈیڈک چیئرمین اور سپیشل اسسٹنٹ اور پارلیمانی سیکریٹری کی پیشکش کی جا رہی ہے، بتایا گیا ہے کہ رواں ماہ کے آخر تک کابینہ میں توسیع کا امکان ہے۔
خبر کا کوڈ : 830219
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش