0
Wednesday 1 Apr 2020 13:46

اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایران میں پھنسے زائرین کی واپسی کیلئے دائر درخواست خارج کردی

اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایران میں پھنسے زائرین کی واپسی کیلئے دائر درخواست خارج کردی
اسلام ٹائمز۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایران میں پھنسے زائرین کو واپس لانے کے لیے دائر درخواست خارج کر دی۔ بدھ یکم اپریل کو اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست ناقابل سماعت قرار دیتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ پالیسی معاملات میں عدالت مداخلت نہیں کر سکتی۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس میں کہا کہ حکومت پر اعتماد کریں کیونکہ پوری دنیا ہی کرونا کی لپیٹ میں ہے۔ پارلیمنٹ اور ایگزیکٹو موجود ہیں آپ متعلقہ فورم پر رجوع کریں۔ وکیل درخواست گزار نے کہا کہ ایران میں ہزاروں پاکستانی پھنسے ہیں اور انکے ویزے بھی ختم ہوچکے ہیں۔

چیف جسٹس نے کہا کہ یہ بین الاقوامی سطح کا مسئلہ ہے اس لیے عدالت ان معاملات میں مداخلت نہیں کر سکتی۔ آپ متعلقہ فورم سے رجوع کریں اور یہ اخذ نہ کریں کہ حکومت کچھ نہیں کر رہی۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ درخواست گزار نے وزارت خارجہ سے رابطہ کیا ہے؟ کیونکہ یہ معاملہ پارلیمنٹ اور وزارت خارجہ کا ہے عدالتوں کا معاملہ نہیں ہے۔ وکیل درخواست گزار نے کہا کہ میڈیا میں تاثر دیا جا رہا ہے کہ سارے مسائل زائرین کی وجہ سے ہیں، جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ عدالت کسی بھی تنازعے میں نہیں پڑے گی اس لیے درخواست مسترد کرتے ہیں۔
 
خبر کا کوڈ : 854003
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش