0
Friday 24 Apr 2020 23:08

کاش عمران خان کا ”کورونا ٹیسٹ‘‘ کیساتھ ”انا وائرس“ کا ٹیسٹ بھی منفی آتا، حافظ حسین احمد

کاش عمران خان کا ”کورونا ٹیسٹ‘‘ کیساتھ ”انا وائرس“ کا ٹیسٹ بھی منفی آتا، حافظ حسین احمد
اسلام ٹائمز۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے مرکزی ترجمان حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ عمران خان کا ”کورونا وائرس“ ٹیسٹ کے ساتھ کاش ”انا وائرس“ کا ٹیسٹ بھی منفی آتا، موجودہ حالات میں قومی سطح پر اتحاد کی ضرورت ہے، تاکہ کورونا اور معاشی وائرس کا ملکر مقابلہ کیا جا سکے، فواد چوہدری کا سائنسی کیلنڈر بھی اس بار ناکام نظر آیا، وفاق کی رٹ سندھ اور بلوچستان کے بعد کے پی کے میں بھی نظر نہیں آرہی، ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنی رہائشگاہ جامع مطلع العلوم میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ حافظ حسین احمد نے کہا کہ اللہ تعالیٰ کے فضل سے عمران خان نیازی کا ”کورونا وائرس“ ٹیسٹ منفی آیا ہے، کاش اسی طرح ان کے ”انا وائرس“ کا ٹیسٹ بھی منفی آجائے، تاکہ وہ اپوزیشن سمیت سب کو ساتھ لیکر چل سکیں اور اس طرح موجودہ حالات میں ملکر کورونا اور معاشی وائرس کا مقابلہ کرسکیں۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت ملک کو جس یکجہتی اور قومی سطح پر اتحاد کی ضرورت ہے، شاید ماضی میں اس کی مثال نہیں ملتی۔

حافظ حسین احمد نے کہا کہ صدر اور وزیراعظم دونوں نے تعمیراتی کام اور فیکٹریوں کے ساتھ ساتھ مساجد کھولنے کیلئے طے شدہ لائحہ عمل کا فیصلہ کیا، لیکن نہ صرف میڈیا بلکہ میڈیکل کے ماہرین کا ہدف صرف مساجد اور نماز ہے اور ان کا یہ کہنا کہ اگر کورونا وائرس کے کیسز میں اضافہ ہوا تو مساجد کو بند کریں گے، کاش اس کے ساتھ وہ یہ بھی کہتے کہ کورونا وائرس کے کیسز بڑھے تو فیکٹریاں، تعمیراتی کام، احساس پروگرام پر لوگوں کا رش اور میڈیا ہاؤسز بند کریں گے، تو کوئی بات بنتی، لیکن صرف ایک ہی طبقے کو نشانہ بنایا گیا جو کسی ایجنڈا کی طرف اشارہ کرتی ہے۔
خبر کا کوڈ : 858770
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش