0
Sunday 11 Oct 2020 22:09

عبداللہ عبداللہ کا دورہ بھارت مکمل، مختلف مسائل پر حکومت سے تبادلہ خیال

عبداللہ عبداللہ کا دورہ بھارت مکمل، مختلف مسائل پر حکومت سے تبادلہ خیال
اسلام ٹائمز۔ طالبان کے ساتھ افغانستان کے اعلیٰ امن مذاکرات کار ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے ہندوستان کے چار روزہ حکومتی دورے کے دوران بین افغان امن عمل کی ترقی سے ہندوستانی حکومت کو مطلع کرایا اور مختلف دو طرفہ، علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر بات چیت کی۔ ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ افغانستان کے ہائی کونسل نیشنل کوآرڈینیشن (ایچ سی این آر) کے چیئرمین بھی ہیں۔ انہوں نے افغان امن عمل کے لئے مکمل حمایت کا اظہار کرنے پر پڑوسی ممالک کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ افغانستان میں امن کے لئے علاقائی اتفاق رائے اور تعاون اہم ہے۔ اپنے بھارت دورہ کے اختتام کے بعد اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ ہندوستان کا چار روزہ حکومتی دورہ کامیاب رہا۔ انہوں نے کہا کہ میں بھارت کے وزیراعظم، وزیر خارجہ، قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اور یہاں کے عوام کا ان کا پرتپاک خیرمقدم اور مہمان نوازی پر شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ میں پڑوسی ممالک کا افغان امن عمل میں مکمل تعاون کرنے پر شکریہ ادا کرتا ہوں۔ افغانستان میں امن کے لئے علاقائی اتفاق رائے اور تعاون بہت ضروری ہے۔

انہوں نے کہا کہ میں نے وزیراعظم نریندر مودی، قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اجیت ڈوبھال اور وزیر برائے امور خارجہ ڈاکٹر ایس جیشنکر سے ملاقات کی اور مختلف علاقائی اور بین الاقوامی امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے کہا کہ نریندر مودی نے انہیں افغان امن عمل کے لئے ہندوستان کی مسلسل حمایت اور ملک کی "نیبرہڈ فرسٹ" پالیسی کے تحت دونوں ممالک کے مابین تاریخی تعلقات کو مزید گہرا کرنے کے لئے ایک طویل مدتی عزم کی یقین دہانی دی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ نے وزیراعظم کو افغان امن عمل اور دوحہ میں جاری مذاکرات سے آگاہ کیا۔ دونوں رہنماؤں نے مختلف دو طرفہ امور پر تبادلہ خیال کیا۔ افغان رہنماء نے 30 ملین امریکی ڈالر کے منصوبوں کے لئے بھارت کی ترقیاتی وابستگی کی تعریف کی اور کہا کہ اس سے ان کے ملک کے تمام 34 صوبوں کے عوام کو فائدہ ہو رہا ہے۔
خبر کا کوڈ : 891478
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش