1
Tuesday 20 Oct 2020 22:58

خلیج فارس میں ایک ہی فریق کو دھمکاتے رہنے کی سیاست بڑی غلطی ہے، سرگئی لاؤروف

خلیج فارس میں ایک ہی فریق کو دھمکاتے رہنے کی سیاست بڑی غلطی ہے، سرگئی لاؤروف
اسلام ٹائمز۔ روسی وزیر خارجہ سرگئی لاؤروف نے خلیج فارس میں سکیورٹی سے متعلق سلامتی کونسل کی ورچوئل میٹنگ سے خطاب میں اس بات پر تاکید کرتے ہوئے کہ خلیج فارس کے خطے نے عدم استحکام کی جانب ایک خطرناک رجحان اپنا لیا ہے، سلامتی کونسل سے مطالبہ کیا کہ وہ اس حوالے سے خلیج فارس کے پورے خطے میں آنے والی تبدیلیوں کا نزدیک سے جائزہ لے۔ سرگئی لاؤروف نے اپنے خطاب میں تاکید کرتے ہوئے کہا کہ خلیج فارس میں امن و امان کا یقینی بنایا جانا پوری دنیا کے لئے اہم ہے، لہذا ہم چاہتے ہیں کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل براہ راست اس موضوع پر نگرانی کرے، جو پوری دنیا میں امن و امان کی ذمہ دار ہے۔

سرگئی لاؤروف نے اپنے خطاب میں ایران کے بارے زور زبردستی اور یکطرفہ پن پر مبنی امریکی سیاست کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ خلیج فارس میں یکطرفہ پالیسیاں (امن عمل میں) ایک بڑی رکاوٹ جبکہ ایک ہی فریق کے خلاف اختیار کردہ دھمکی آمیز سیاست بڑی غلطی ہے۔ روسی وزیر خارجہ نے کہا کہ خلیج فارس کے خطے میں امن عمل کے ڈھانچے کی تشکیل کوئی آسان کام نہیں۔ دوسری طرف اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیو گیوٹرس نے بھی اس میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے تمام فریقوں سے مطالبہ کیا کہ وہ خلیج فارس میں تناؤ کم کرنے اور خطے کے اندر اعتماد سازی کے لئے عملی اقدامات اٹھائیں۔
خبر کا کوڈ : 893168
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش