0
Sunday 17 Oct 2021 23:44

عدلیہ کو طاقت کے مراکز سے بے خوف ہوکر فیصلے کرنے چاہیئں، جسٹس مقبول باقر

عدلیہ کو طاقت کے مراکز سے بے خوف ہوکر فیصلے کرنے چاہیئں، جسٹس مقبول باقر
اسلام ٹائمز۔ سپریم کورٹ کے جج جسٹس مقبول باقر نے کہا ہے کہ عدلیہ کو طاقت کے مراکز سے بے خوف ہو کر فیصلے کرنے چاہئیں، آزاد عدلیہ ہی ہر طرح کے دباؤ سے آزاد رہ سکتی ہے۔ سندھ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کی جانب سے منعقدہ تقریب سے خطاب میں جسٹس مقبول باقر نے کہا کہ جج کی آزادی بھی عدلیہ کی ہی آزادی ہے، جج کو حکومت اور سیاسی گروہوں سے بھی آزاد رہنا چاہیئے۔ جسٹس مقبول باقر نے کہا کہ جج کو کسی دوسرے جج کے دباؤ سے بھی آزاد رہنا چاہیئے اور اپنی آزادانہ سوچ سے فیصلے کرنے چاہئيں۔ انہوں نے کہا کہ غیر جانبدار سوچ والے جج کو حساس مقدمات سے الگ کرنا عدلیہ کے تقدس پر منفی اثرات ڈالتا ہے۔
خبر کا کوڈ : 959210
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش