0
Thursday 27 Jan 2022 22:00

کوئٹہ، عدالت عالیہ کیجانب سے گوادر میں شراب کے اجازت نامے منسوخ کرنے کے احکامات معطل

کوئٹہ، عدالت عالیہ کیجانب سے گوادر میں شراب کے اجازت نامے منسوخ کرنے کے احکامات معطل
اسلام ٹائمز۔ بلوچستان ہائی کورٹ نے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن بلوچستان کی جانب سے گوادر میں شراب فروخت کرنے کے اجازت نامے منسوخ کرنے کے احکامات کو معطل کرتے ہوئے دکانیں کھولنے کی اجازت دے دی ہے۔ آج بلوچستان ہائی کورٹ کے ویکیشن جج جسٹس نذیر احمد لانگو نے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کی جانب سے گوادر میں شراب کی دکانوں کا لائسنس منسوخ کرکے انہیں بند کرنے کے اقدام کے خلاف دائر آئینی درخواست پر سماعت کی۔ سماعت میں درخواست گزاروں کے وکیل امان اللہ کنرانی کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ حکومت کا درخواست گزاروں کا شراب فروخت کرنے کا لائسنس منسوخ کرنے کا اقدام آئین کے 10A، آرٹیکل 18 کی خلاف ورزی ہے لہذا اسے معطل کیا جائے۔ انہوں نے عدالت سے استدعا کی کہ آئینی درخواست پر فیصلہ آنے تک درخواست گزاروں کو کاروبار جاری رکھنے کی اجازت دی جائے۔ جس پر عدالت نے آئینی درخواست کو قابل سماعت قرار دیتے ہوئے ڈائر یکٹر جنرل محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن، انسداد منشیات ساؤتھ زون حب کے 15 دسمبر 2021 کے آرڈر کو معطل کرتے ہوئے کیس کی سماعت مارچ 2022 کے پہلے ہفتے تک ملتوی کردی۔
خبر کا کوڈ : 975895
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش